تاریخ شائع کریں2022 29 September گھنٹہ 13:51
خبر کا کوڈ : 567122

مغربی کنارے پر صہیونی فوج کے حملے میں 12 فلسطینی زخمی

اس رپورٹ کے مطابق فلسطینی ہلال احمر نے ایک بیان میں اعلان کیا: مغربی کنارے کے جنوب میں واقع شہر دورہ پر اسرائیلی غاصبوں کے حملے میں 12 افراد زخمی ہوئے اور طبی عملے نے ان کا علاج کیا۔
مغربی کنارے پر صہیونی فوج کے حملے میں 12 فلسطینی زخمی
 فلسطینی ذرائع نے مغربی کنارے پر صیہونی فوج کے حملے میں متعدد فلسطینیوں کے زخمی ہونے کی اطلاع دی ہے۔

اس رپورٹ کے مطابق فلسطینی ہلال احمر نے ایک بیان میں اعلان کیا: مغربی کنارے کے جنوب میں واقع شہر دورہ پر اسرائیلی غاصبوں کے حملے میں 12 افراد زخمی ہوئے اور طبی عملے نے ان کا علاج کیا۔

اس بیان میں کہا گیا ہے: زخمیوں میں 5 افراد جنگی گولیوں سے زخمی ہوئے اور 2 افراد پلاسٹک کی گولیوں سے زخمی ہوئے۔

فلسطینی ہلال احمر نے بھی اس بات پر زور دیا کہ اسرائیلی فوجیوں کی طرف سے آنسو گیس کے گولے داغنے کے نتیجے میں پانچ فلسطینی زخمی ہوئے۔

اسی دوران عینی شاہدین نے مغربی کنارے کے شہر دورہ میں فلسطینیوں کے گھروں پر صیہونی فوجیوں کے حملے کی اطلاع دی۔

فلسطینی نوجوانوں نے صیہونیوں پر پتھروں سے حملہ کیا۔

 صیہونی دہشت گردانہ رویہ

دوسری جانب الجزیرہ نے خبر دی ہے کہ صہیونی فوج کے چیف آف اسٹاف ایوب کوخاوی نے مغربی کنارے میں فلسطینی جنگجوؤں کے قتل کی اجازت دے دی ہے۔

مغربی کنارے کی صورتحال پر خصوصی سیکورٹی میٹنگ کے دوران انہوں نے دعویٰ کیا: ایسی صورتوں میں جہاں زمینی راستے سے تخریب کاروں تک پہنچنا ممکن نہ ہو، اوپر سے قاتلانہ کارروائی کی جا سکتی ہے۔

الجزیرہ نے رپورٹ کیا کہ کوخاوی کا تبصرہ فلسطینیوں کے خلاف ڈرون استعمال کرنے کی اجازت تھی۔

فلسطین سے ایک اور خبر یہ ہے کہ صیہونی افواج نے آج جمعرات کی صبح بیت المقدس کے جنوب میں واقع گاؤں ارطاس میں ایک مکان کو تباہ کر دیا۔

فلسطین کے نامہ نگار الیوم نے رپورٹ کیا: قابض فوج نے براق سلیمان کے علاقے پر حملہ کیا اور پرمٹ نہ ہونے کے بہانے اسماعیل عواد صلاح الدین کے 220 میٹر کے دو منزلہ مکان کو تباہ کردیا۔

مغربی کنارے میں عام ہڑتال

دوسری جانب فلسطینی ذرائع نے جمعرات کو مغربی کنارے میں جنین کے شہداء کے سوگ میں مسلسل دوسرے روز بھی ملک گیر ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔

آج فلسطینی بار ایسوسی ایشن نے عدالتوں میں اپنی تمام سرگرمیاں معطل کر دیں اور وکلاء سے کہا کہ وہ قوم پرستانہ اقدامات کریں۔

جنین شہر میں فلسطینی عوام کے خلاف قابض فوج کے جرائم بالخصوص جنین میں ہونے والے وحشیانہ حملے کی مذمت میں مکمل ہڑتال ہے۔

نابلس میں بھی ہڑتال دیکھی جا رہی ہے، یہ صورتحال تلکرم اور بیت المقدس میں بھی ہے۔ بیت لحم میں المہد چرچ اور بیت جالا اور بیت سہور گرجا گھروں کی گھنٹیاں شہیدوں کے سوگ میں بجائی گئیں۔

تباس میں جنیش الفتح نے شہداء کے سوگ میں ملک گیر ہڑتال کا اعلان کیا۔
http://www.taghribnews.com/vdccimqpi2bqes8.c7a2.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس