تاریخ شائع کریں2022 29 September گھنٹہ 13:40
خبر کا کوڈ : 567119

تہران پورے امن میں ہے؛ تاہم دشمن عناصر بدامنی پھیلانے کے درپے ہیں

دشمن عناصر ایران مخالف میڈیا میں کبھی کبھار ایک ہی رات کے اندر 100 پوسٹ شائع کردیے جاتے تھے اور وہ جو میڈیا میں سرگرم ہیں اس بات سے بخوبی واقف ہیں کہ ان بڑے تعداد کے پوسٹ کی کتنی لاجسٹک کی ضرورت ہے۔
تہران پورے امن میں ہے؛ تاہم دشمن عناصر بدامنی پھیلانے کے درپے ہیں
تہران کے میئر نے کہا ہم دھوکہ میں آنے والوں اور لاپرواؤں کو بد امنی پھیلانے والوں سے الگ سمجھتے ہیں۔ حالیہ واقعات کا خاتمہ ہوگیا ہے اور اب کئی راتیں ہیں کہ تہران پورے امن میں ہے؛ تاہم دشمن عناصر بدامنی پھیلانے کے درپے ہیں۔

"محسن منصوری" نے جمعرات کو گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ ملک میں رونما ہونے والے حالیہ واقعات میں ہم نے میڈیا میں دھاروں کے درمیان لڑائی نظر میں آئی۔ دشمن عناصر ایران مخالف میڈیا میں کبھی کبھار ایک ہی رات کے اندر 100 پوسٹ شائع کردیے جاتے تھے اور وہ جو میڈیا میں سرگرم ہیں اس بات سے بخوبی واقف ہیں کہ ان بڑے تعداد کے پوسٹ کی کتنی لاجسٹک کی ضرورت ہے۔

تہران کے میئر نے کہا کہ ایران کی قومی سلامتی کیخلاف بہت سارے ٹوئٹر پیغامات کو، سعودی عرب اور البانیہ میں منصوبہ بندی اور شائع کی گئی ہے اور بہت سارے مظاہروں نے اس بات کا اعتراف کیا کہ انہوں نے بدامنی پھیلانے کے مقابلے میں پیسے وصول کیے ہیں اور ہم بلاشبہ ان کیخلاف کاروائی کریں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ 2016 اور 2018 کے مظاہروں کے دوران، اگر کسی بدامنی پھیلا رہا تھا تو دیگر افراد ٹھہر کر ان کو دیکھ رہے تھے، لیکن رواں سال میں اور ایرانی عوام میں پوری واقفیت کی وجہ سے حتی ایک ہی فرد بھی ان مظاہروں کو دیکھنے کیلئے نہیں روکا۔
http://www.taghribnews.com/vdcizyaw3t1aqz2.s7ct.html
آپ کا نام
آپکا ایمیل ایڈریس